مزید خبریں

Jamaat e islami

سودی سرمایہ دارانہ نظام نے غلامی کے سوا کچھ نہیں دیا‘ حافظ ادریس

لاہور(نمائندہ جسارت)مرکزی رہنما جماعت اسلامی حافظ محمد ادریس نے کہا ہے کہ قرآن و سنت کا نظام ہی انسانیت کے دکھوں کا مداوا ہے۔ سودی اور سرمایہ دارانہ نظام نے لوگوں کو بھوک اور غلامی کے سوا کچھ نہیں دیا۔ آئی ایم ایف سودی قرضوں کے ذریعے مقروض ملکوں سے اپنے ناجائزمطالبات منوانے کے لیے عوام پر طرح طرح کے ٹیکسوں کی بھرمار کراتا ہے۔ ہمارے حکمران بھی آئی ایم ایف اور عالمی مالیاتی اداروں کے حکم کے سامنے سرتسلیم خم کیے ہوئے ہیں۔ پیٹرول، ڈیزل، بجلی اور اشیا خورونوش کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے نے غریب کا جینا مشکل کر دیا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔حافظ ادریس نے کہا کہ حکمران غربت نہیں بلکہ غریب مکائو پالیسی پر گامزن ہیں۔ حکمران اشرافیہ عوام پر مہنگائی کے کوڑے برسارہی ہے ان حالات میں غریب کو چولہا جلانا مشکل ہو گیا ہے۔ حکومت پسے ہوئے طبقے کی چیخوں اور بددعائوں سے ڈرے۔ انھوں نے کہا کہ حکمران اسرائیل سے پینگیں نہ بڑھائیں، اسرائیل ایک ناجائز ریاست ہے اور اسے کبھی تسلیم نہیں کیا جائے گا۔ صہیونی طاقت فلسطینیوں پر ظلم و ستم بند کرے۔ اسرائیل مسلم ممالک کے وسط میں بیٹھ کر فلسطینیوں پر ظلم اور قبلہ اول پر قبضہ جمائے بیٹھا ہے۔ انھوں نے کہا کہ بھارت ریاستی ظلم و جبر کے ذریعے کشمیر پر قابض ہے۔ بھارت کشمیریوں پر طاقت اور تشدد کے ذریعے ان پر حکمرانی کر رہا ہے۔ کشمیریوں کی آزادی کی جدوجہد ان کا حق ہے۔ جماعت اسلامی کشمیر و فلسطین کی آزادی کے لیے ہر فورم پر اپنی آواز بلند کرتی رہے گی۔انھوں نے کہا کہ تینوں بڑی سیاسی جماعتوں نے عوام کو وعدوں، دعوئوں اور فریب میں مبتلا رکھا، ان کے دکھوں کا مداوا کرنے کے بجائے محرومیاں اور مایوسیاں بانٹ رہی ہیں۔ اب عوام کو جاگنا ہو گا، کسی دلفریب نعروں، وعدوں اور دعوئوں میں نہ آئیں۔چہرے بدلنے سے نہیں نظام بدلنے سے تبدیلی آئے گی۔ عوام سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ جماعت اسلامی کا ساتھ دیں۔