مزید خبریں

کھپرو: قبرستان کی چار دیواری ادھوری چھوڑ کر ٹھیکیدار غائب

کھپرو (نمائندہ جسارت) شہر کے 2 قبرستانوں میں سے ایک جھنگ شاہ قبرستان کی حالت زار، ایم این اے شازیہ عطا مری کی جانب سے جھنگ شاہ قبرستان کے لیے 2 ہزار فٹ 4 دیواری کی اسکیم منظور کی گئی، کام شروع ہوا لیکن صرف ڈیڑھ سو فٹ دیوار کھڑی کر کے ٹھیکیدار بھاگ گیا۔ 4 دیواری نہ ہونے کی وجہ سے اس قدیم قبرستان کی قبروں کو آئے روز آوارہ کتے پامال کرتے رہتے ہیں، نا صرف آوارہ کتے بلکہ آس پاس رہنے والے لوگوں کا چوپایا مال بھی اکثر قبرستان میں آزادانہ گھوم رہا ہوتا ہے۔ قبرستان کے خادم کے مطابق جب چوپائے مال کے مالکان سے شکایت کی جاتی ہے تو اُلٹا وہ لڑنے کو دوڑ پڑتا ہے، اس کے علاوہ قبرستان میں لائٹ کا مسئلہ بھی بہت اہم ہے، اکثر رات کے وقت دفنائے جانے والے لوگوں کے ورثاء کو قبرستان میں اندھیرا ہونے کی وجہ سے پہلے بیٹریوں، گیس کے لیمپس اور دیگر لائٹس کا انتظام کرنا پڑتا ہے۔ عوام نے ایم این اے شازیہ عطا مری اور ایم پی اے علی حسن ہنگورجو سے خصوصی درخواست کی ہے کہ سب سے پہلے تو اس ٹھیکیدار سے جواب طلب کیا جائے اور اس کے خلاف مالی کرپشن کی تحقیقات کروائی جائیں، اس کے بعد قبرستان کی اس چار دیواری کو فوری تعمیر اور شہر کے دونوں قبرستانوں میں بجلی کا کوئی معقول انتظام کیا جائے۔