مزید خبریں

احتجاج وہی کر رہے ہیں جنہیں عوام نے مسترد کردیا ،مرتضی وہاب

کراچی (آن لائن) میئر کراچی بیرسٹر مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ سیاسی احتجاج کے حق پر یقین رکھتا ہوں مگر لوگوں کو پریشانی میں مبتلا کرکے اور سندھ اسمبلی کا گھیراﺅ کرنے والے آخر کیا ثابت کرنا چاہتے ہیں، احتجاج وہی کر رہے ہیں جنہیں عوام نے مسترد کردیا، امید ہے کہ آنے والے وقت میں یہ لوگ ہوش سے کام لیں گے، کراچی میں کئی جماعتیں اسٹیک ہولڈر
ہیں، اگر ہم شہر، صوبے اور عوام کے ساتھ مخلص ہیں تو سب کو مل کر کام کرنا ہوگا، شور اور احتجاج کرنے سے مسائل حل ہوتے تو حافظ نعیم اقوام متحدہ اور حلیم عادل شیخ او آئی سی کے سیکریٹری جنرل بن گئے ہوتے، یہ سمجھنا ہوگا کہ ہمارے اثاثوں کو سوچی سمجھی سازش کے تحت تباہ کیا گیا تاکہ ان پر قابض لوگ پیسہ کمائیں اور کے ایم سی کو کچھ نہ ملے مگر اب کسی کو مال غنیمت لوٹنے نہیں دیں گے، کے ایم سی اسپورٹس کمپلیکس میں باﺅلنگ ایرینا سالہاسال سے بند پڑا تھا، ہم نے فیصلہ کیا کہ نجی شعبے کے اشتراک سے اس سہولت کو شہریوں کے لئے کھولا جائے اور اس سے کے ایم سی کو آمدنی بھی ہو، 16 کروڑ روپے کی لاگت سے با¶لنگ ایرینا بنانے کا کام شروع کردیا ہے جسے نجی شعبے کی شراکت سے چلایا جائے گا، کے ایم سی مارکیٹ سے کم خرچ پر شہریوں کو یہ سہولت فراہم کررہی ہے، ہمارا ہدف کے ایم سی کے تمام پارکس اور اسپورٹس کے مراکز کو فعال اور بہتر کرنا ہے، ان خیالات کااظہار انہوں نے ہفتہ کے روز کے ایم سی اسپورٹس کمپلیکس میں با¶لنگ ایرینا کے آغاز پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔