مزید خبریں

Jamaat e islami

مہنگائی کی وجہ سے شرح سود میں کمی مشکل ہو رہی ہے

کراچی (کامرس رپورٹر)نیشنل بزنس گروپ پاکستان کے چیئرمین، پاکستان بزنس مین اینڈ انٹلیکچولزفورم وآل کراچی انڈسٹریل الائنس کے صدراورسابق صوبائی وزیرمیاں زاہد حسین نے کہا ہے کہ مہنگائی میں اضافہ مرکزی بینک کی جانب سے شرح سود میں کمی کرنے میں بڑی رکاوٹ ہے۔ گزشتہ ماہ مجموعی افراط زر 2.7 فیصد کے اضافیکے ساتھ 29.2 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔ گزشتہ ماہ اشیائے خورد ونوش کی قیمت میں بھی اضافہ ہوا ہے جبکہ دیگر بہت ساری اشیاء کی قیمت میں کمی آئی ہے۔ مہنگائی کی بڑی وجہ گیس کی قیمتوں میں ہوشربا اضافہ ہے۔ گیس کی قیمتوں میں 194 فیصد اضافے کی وجہ سے اگلے مالی سال میں افراط زر 25 فیصد رہنے کا تخمینہ ہے جس میں مزید اضافہ بھی ممکن ہے۔ میاں زاہد حسین نے کاروباری برادری سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ماہرین کا خیال تھا کہ مرکزی بینک شرح سود جلد کم کر دے گا مگر مہنگائی کے اعداد و شمار جاری ہونے کے بعد یہ مشکل لگتا ہے اور اب یہ اندیشہ ہے کہ مرکزی بینک مانیٹری پالیسی میں کوئی نرمی نہیں کرے گا۔ گیس کی قیمتوں میں اضافے کی وجہ سے لمبے عرصے کے بعد شہری علاقوں میں مہنگائی دیہی علاقوں سیزیادہ بڑھ گئی ہے کیونکہ گیس مہنگی ہونے سے دیہی علاقوں کو کوئی خاص فرق نہیں پڑتاہے مگر شہری علاقے متاثر ہوتے ہیں۔