مزید خبریں

باڈہ ،یوسی ڈیرہ 45 اوردھامراہ 46 پر دھاندلیوں کا نوٹس لیا جائے

باڈہ (نمائندہ جسارت) یوسی ڈیرہ 45 اور یوسی دھامراہ پر آزاد امیدوار برائے چیئرمین جاوید حسین کھوکھر اور اس کے چچازاد بھائی صفدر حسین کھوکھر کو الیکشن میں ہارنے کے لیے مخالف امیدواروں اور ان کے حامیوں کی جانب سے دھاندلیاں کی گئیں۔ کتنی ہی پولنگ اسٹیشنز پر مخالف امیدواروں کے حامیوں نے دیواریں کود کر پولنگز پر قبضہ کیا اور کتنی ہی پولنگز گھنٹوں تک بند کی گئیں اور سرکاری مشینری کا بھی بھرپور استعمال کیا گیا۔ اکثر پولنگز پر تعینات پولیس اہلکار غائب رہے۔ جبکہ الیکشن گزرنے کے 3 دن بعد بھی اب تک نتیجہ نہیں دیا گیا جس کی وجہ سے انتخابات مشکوک ہوگئے ہیں۔ اس سلسلے میں رابطہ کرنے پر امیدوار برائے چیئرمین جاوید حسین کھوکھر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ مخالفین کی جانب سے شفاف الیکشن لڑنے کے بجائے دھاندلی کی گئی ہے، جن پولنگز پر ہمارے حامیوں کی اکثریت تھی انہیں مشکوک بتا کر گھنٹوں تک بند کردیا گیا جبکہ مخالف امیدواروں کے حامی دیواریں کود کر ووٹ کاسٹنگ والے باکس اٹھا کر فرار ہوگئے پوریعمل میں پولیس انتظامیہ برابر کی شریک ہے۔ اکثر پولنگ اسٹیشنز پر اہلکار غائب تھے۔ مزید اس نے سپریم کورٹ آف پاکستان، سندھ ہائی کورٹ اور الیکشن کمیشن آف پاکستان سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کے یوسی ڈیرہ 45 اور یوسی دھامراہ 46 پر ہوئی دھاندلیوں کا نوٹس لے کر دھاندلی کرنے والوں کے خلاف کارروائی کی جائے اور ووٹوں کی دوبارہ گنتی کرکے نتیجہ ظاہر کیا جائے نہیں تو سخت احتجاج کیا جائے گا۔