مزید خبریں

مبینہ اغوا کے بعد لڑکی سے نکاح کا ایک اور کیس سامنے آگیا

کراچی (اسٹاف رپورٹر) مبینہ اغوا کے بعد لڑکی سے نکاح کا ایک اور کیس سامنے آگیا،عدالت نے پولیس کو لڑکی کا بیان لینے کے بعد لڑکے کے ساتھ جانے کی اجازت دے دی۔سندھ ہائیکورٹ میں درخواست گزار کاکہناتھا کہ بیٹی امِ ہانی کو 21 مئی کو حیدر آباد سے اغوا کیا گیا، پولیس نے لڑکی اور لڑکے کو عدالت میں پیش کیا۔ عدالت میں لڑکی نے اپنے بیان میں کہاکہ مجھے کسی نے اغوا نے نہیں کیا آفتاب سے شادی کی ہے۔والد کاکہناتھا کہ لڑکی کی عمر گیارہ سال ہے، اغوا کے بعد شادی کی گئی، عدالت کاکہناتھا کہ ہمارے سامنے گمشدگی کا کیس تھا، لڑکی عدالت میں پیش ہوچکی ہے، مزید کچھ نہیں کرسکتے، والد کاکہناتھا کہ بیٹی چھٹی کلاس میں پڑھتی ہے، یہ لوگ مافیا ہیں بیچ دیں گے، عدالت کاکہناتھا کہ جو بھی تحفظات ہیں ٹرائل کورٹ سے رجوع کریں۔