مزید خبریں

پختونخوا حکومت قبائلی اضلاع میں موسمیاتی تبدیلی پر کام کریگی

جمرود (جسارت نیوز) خیبر پختونخوا حکومت قبائلی اضلاع میں ہلال احمر پاکستان برائے قبائلی اضلاع کے ساتھ ملکر موسمیاتی تبدیلی کے اثرات سے نمٹنے پر کام کرے گی، صوبائی وزیر برائے جنگلات، ماحولیات اور وائلڈ لائف سید محمد اشتیاق اْرمڑ نے جمرود ضلع خیبر میں ’’کلائیمیٹ ایڈواکسی اینڈ کوآرڈینشین فار ریزیلینٹ ایکشن پروجیکٹ‘‘ کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ صوبے بھر میں 60 سے زاید افراد رنگے ہاتھوں گرفتار کیے گئے ہیں جو جنگلات کو آگ لگا رہے تھے۔ انکا کہنا تھا کہ صوبائی حکومت ہلال احمر پاکستان برائے قبائلی
اضلاع کے ساتھ درخت لگانے اور موسمیاتی تبدیلی سے نمٹنے میں انکا مکمل ساتھ دینگے۔ ان کا کہنا تھا کہ ڈی فارسٹیشن کی وجہ سے پاکستان دنیا کا ساتواں بڑا ملک ہے جو موسمیاتی تبدیلی سے متاثر ہو رہا ہے،جنوبی اضلاع میں 15 فیصد بارشیں کم ہوئی ہیں اور 2060ء تک بارشیں مزید 15فیصد کم ہوں گی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سابق وفاقی وزیر برائے مذہبی اْمورڈاکٹر نورالحق قادری نے کہا کہ اسلام ، حدیث اور قران مجید ہمیں یہ درس دیتا ہے کہ پانی کو ضائع نہ کریں درخت لگائیں اور اپنے ماحو ل کو صاف ستھرا رکھیں۔ انکا کہنا تھا کہ عمران خان نے کلائیمیٹ چینج پر کام کیا جس کی دنیا بھی معترف ہے۔ چیئرمین ہلال احمر پاکستان برائے قبائلی اضلاع آصف خان محسود نے کہا کہ ہلال احمر پاکستان قبائلی اضلاع میں 10 کروڑ مقامی درخت لگانے کا ارادہ رکھتا ہے جسکا جلد ہی آغاز کیا جائے گا، پھل دار درخت لگانے سے مقامی اور پسماندہ طبقے کا معاش بھی بہتر ہو گا ، اگر جلد از جلد یہ درخت لگائے جائیں تو آئندہ 5 سال میں مقامی آبادی اپنی پاؤں پر کھڑی ہو سکتی ہے۔