مزید خبریں

تعلیمی بورڈ کی ٹیم پر اساتذہ کا تشدد قابل مذمت ہے،مسرور احمد زئی

حیدرآباد(اسٹاف رپورٹر) تعلیمی بورڈ کے کنٹرولر امتحانات ڈاکٹر مسرور احمد زئی نے مسلم ہائی اسکول کلاتھ مارکیٹ میں بورڈ کی ٹیم پر اساتذہ کی جانب سے تشدد‘ اسٹینٹ کنرولر جاوید شورو‘ اعجاز علی کاکا کے کپڑے پھاڑنے کے واقعے پر اپنا موقف دیتے ہوئے کہاکہ یہ عمل قابل افسوس ہے امتحانی عمل سیاست اور لسانیت سے پاک ہونا چاہیے اور اساتذہ قوم کے معمار ہوتے ہیں انہیں اور خصوصاً اساتذہ تنظیم کے رہنما کو اس قسم کے معاملات میں ملوث نہیں ہونا چاہیے۔ انہوںنے کہاکہ 26 ویجلنس ٹیمیں امتحانی مراکز کا روزانہ دورہ کرتی ہیں دیہی علاقوں اور شہری علاقوں کے مراکز کا روزانہ دورہ کرتی ہے اور جہاں بھی کاپی کیسر ہوتے ہیں ٹیم ان کو رپورٹ کرتی ہے اور روزانہ کی بنیاد پر بورڈ انتظامیہ فیگرز جاری کرتی ہے ایسے میں اساتذہ کو اس قسم کے منفی معاملات سے دور رہنا چاہیے اساتذہ طلبہ کے لیے رول ماڈل ہوتے ہیں معلوم ہوا ہے کہ مسلم ہائی اسکول میںریاض اور اور زولوجی کے پیپر کے دوران بورڈ کی ٹیم نے 21کاپی کیسز پکڑے جس پر اسکول کے اساتذہ کی جانب سے دباؤ ڈالا گیا اوربورڈ کی ٹیم پر تشدد اور معاملے کو لسانی رنگ دینے کی کوشش کی گئی۔