مزید خبریں

Jamaat e islami

مارکیٹیں بند کرنے سے بجلی کی بچت نہیں ہوگی‘کاشف چودھری

اسلام آباد ( نمائندہ جسارت) توانائی بچت کی خاطر مارکیٹیں بند کرنے کے حکومتی فیصلوں سے بجلی کی بچت ممکن نہیں۔ان خیالات کا اظہار کاشف چودھری صدر مرکزی تنظیم تاجران پاکستان نے مارکیٹوں کے دورے کے موقع پر تاجر نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے کہا ماضی میں بھی اس طرح کے فیصلے کیے گئے مگر کبھی بھی نہ تو فیصلوں پر عملدرآمد ہو سکا اور نہ ھی لوڈشیڈنگ کا خاتمہ ہو سکا۔بلکہ اس طرح کے فیصلوں سے صنعت و تجارت کا نقصان اور امن و
امان کے مسائل پیدا ہوئے۔ انہوں نے کہا سرکاری دفاتر میں دیر سے چھٹی ہونے اور شدید گرمی کے باعث عید خریداری کیلیے خریدار شام کے اوقات کار میں مارکیٹوں کا رخ کرتے ھیں۔اس لیے عید سے متعلقہ کاروباروں کو رات گئے تک کاروبار کرنے کی اجازت دی جائے۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت دن کے اوقات کار میں بلاتعطل بجلی فراھم کرے۔سرکاری دفاتر کے اوقات کار صبح 7 تا 3 بجے مقرر کرے تو تاجر دکانیں صبح جلدی کہولنے اور شام کو جلدی بند کرنے کیلیے تیار ھیں۔انہوں نے کہا ھر حکمران اپنی کوتاھیوں،غلط فیصلوں کا بوجھ تاجر برادری اور عوام پر ڈالنے کی کوشش کرتا ھے جس سے تجارت کرنا مشکل اور عام آدمی کیلیے زندگی گزارنا اجیرن بن جاتا ھے۔اور تباہ حال معاشی حالات سے متاثر کاروباری طبقہ کیلیے کاروبار کرنا ناممکن ہو چکا ہیجس سے معاشرے میں بیروزگاری اور انارکی جنم لینے کے خطرات موجود ہیں۔اس لیے حکومت کو اسٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے دانشمندانہ فیصلے کرنے چاہییں۔