مزید خبریں

Jamaat e islami

خواتین و بچوں سے زیادتی، پنجاب میں ایمرجنسی لگانے اور ہیلپ لائن کے قیام کا فیصلہ

 

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پنجاب حکومت نے صوبے میں خواتین اور بچوں کے ساتھ زیادتی کے بڑھتے ہوئے واقعات پر ایمرجنسی نافذ کرنے اور ہیلپ لائن کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ لاہور میں صوبائی وزرا عطا تارڑ اور ملک احمد خان کی پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ پنجاب میں روزانہ 4 سے 5 زیادتی کے کیسز رپورٹ ہورہے ہیں، بچوں اور خواتین کے ساتھ زیادتی کے واقعات میں شدت سے اضافہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ قانون میں ترمیم کر کے خواتین اور بچوں کا تحفظ یقینی بنائیں گے، بڑھتے ہوئے واقعات کو مدنظر رکھتے ہوئے صوبے میں ایمرجنسی نافذ کرنے کا فیصلہ کیا ہے، اس حوالے سے ہیلپ لائن بھی بنائی جائے گی۔ عطا اللہ تارڑ نے کہا کہ ساڑھے تین سال کے دوران جرائم میں خطرناک حد تک اضافہ ہوا
اور امن و امان کی صورت بدترین مقام تک پہنچ چکی ہے، پولیس افسران کی اندھادھند پوسٹنگ کی گئیں جس کے ریٹ طے تھے جس کا خمیازہ عوام بھگت رہے ہیں۔