مزید خبریں

Jamaat e islami

مونس الٰہی کیخلاف مقدمہ چودھری صاحبان کو عمران خان کا تحفہ ہے‘رانا ثنا

اسلام آباد (صباح نیوز)وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ خان نے کہا ہے کہ منی لانڈرنگ کیس میں چوہدری مونس الٰہی کی گرفتاری کے لئے کوئی ریڈ نہیں ہو گا، چوہدری مونس الٰہی آئیں انہیں باعزت طریقہ سے بٹھایا جائے گا ، ساری دستاویزات ان کے سامنے رکھی جائیں گی اورانہیں پورا موقع دیا جائے گا کہ وہ اپنا جواب جمع کرائیں۔ اگر مونس الٰہی کو نوٹس موصول نہیں ہوا تو نوٹس ان کو آجائے گا ، انہیں نوٹس جاری کیا گیا ۔سابق وزیر اعظم عمران خان کے دورمیں شروع کی گئی رحیم یارخان شوگر ملز کے حوالے سے انکوائری تکمیل کے قریب تھی اور اسے ہم نے مکمل کیا ہے اوردوبارہ سے اس پر غور کیا ہے اور یہ بات ثابت ہے کہ یہ پیسے نواز بھٹی اور مظہر حسین کے نہیں تھے اوریہ پیسے چوہدری صاحبان کے ہی تھے۔دیگر شوگر ملز کے حوالے سے انکوائری ابتدائی مرحلہ میں ہے جبکہ عمران خان کو چوہدری پرویزالٰہی سے بڑی محبت اور بڑا پیار تھا اور مونس الٰہی سے بڑا پیار تھا توان کے خلاف انکوائری کو تیزی سے مکمل کرادیا، عمران خان مونس الٰہی کو گرفتار بھی کروانا چاہتے تھے اور یہ خود ان کے عمل میں تھا اور انہوں نے اس حوالے سے خود مجھے بھی بتایا۔ یہ چوہدری صاحبان کو عمران خان کی طرف سے گفٹ ہے۔ ان خیالات کااظہار رانا ثناءاللہ خان نے ایک نجی ٹی وی سے انٹرویو میں کیا۔