مزید خبریں

Jamaat e islami

ڈالر 205 روپے کی بلند ترین سطح پر سونا 650 روپے مہنگا ،اسٹاک میں شدید مندی 100 پوائنٹس گرگئے

کراچی(اسٹاف رپورٹر)آئی ایم ایف شرائط کے مطابق وفاقی بجٹ پیش ہونے کے باوجود ڈالر کی دوبارہ پیش قدمی جاری رہی جس سے اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قدر 2روپے کے اضافے سے 205 روپے کی نئی بلند سطح پر بند ہوئی۔یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ حکومت ملکی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے ایندھن درآمد کرنے کے لیٹر آف کریڈٹ کھول رہی ہے جو زرمبادلہ کے ذخائر میں تسلسل سے کمی کا باعث بن رہی ہے جس سے اسٹیٹ بینک میں زرمبادلہ کے ذخائر سنگل ڈیجٹ پر آگئے ہیں۔اسی طرح ماہوار بنیادوں پر ترسیلات زر کی آمد میں 25 فیصد کی کمی سے مارکیٹوں میں طلب کی نسبت رسد میں کمی نے روپیہ کو بے قدر کر دیا ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ عالمی مارکیٹ میں خام تیل کی قیمتیں مطلوبہ حد تک نیچے نہ آنے، ملک پر بیرونی ادائیگیوں کے دباؤ اور آئی ایم ایف قرض پروگرام کی بحالی اور قسط کے اجراء میں تاخیر سے یومیہ بنیادوں پر مالیاتی بحران کی شدت بڑھ رہی ہے جو زرمبادلہ کی مارکیٹوں پر اثر انداز ہیں۔ادھر عالمی مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت 31 ڈالر کی کمی سے 1858 ڈالر کی سطح پر پہنچنے کے باوجود مقامی صرافہ مارکیٹوں میں پیر کو فی تولہ اور 10 گرام سونے کی قیمت میں بالترتیب 650 روپے اور 557 روپے کا اضافہ ہوگیا۔جس کے نتیجے میں کراچی، حیدرآباد، سکھر، ملتان، لاہور، فیصل آباد، راولپنڈی، اسلام آباد، پشاور اور کوئٹہ کی صرافہ مارکیٹوں میں فی تولہ سونے کی قیمت بڑھ کر 142800 روپے ہوگئی اور فی دس گرام سونے کی قیمت بڑھ کر 122428روپے ہوگئی تاہم اس کے برعکس فی تولہ چاندی کی قیمت بغیر کسی تبدیلی کے 1540روپے اور دس گرام چاندی کی قیمت بھی بغیر کسی تبدیلی کے1320 روپے کی سطح پر مستحکم رہی۔ دوسری جانب پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) کو بھی شدید مندی کا سامنا ہے جہاں 100 انڈیکس 1100پوائنٹس سے زائد گر کر 41 ہزار کی نفسیاتی حد بھی کھو گیا۔