مزید خبریں

Jamaat e islami

لیاقت بلوچ سے پی ٹی آئی کے مرکزی رہنمائوں کی ملاقات

لاہور(نمائندہ جسارت)نائب امیر جماعت اسلامی، صدر مجلس قائمہ سیاسی،قومی امور لیاقت بلوچ سے پی ٹی آئی کے مرکزی رہنماؤں حلیم عادل شیخ، علیم عادل شیخ نے ملاقات کی۔لیاقت بلوچ نے کہا کہ شہباز شریف کی اتحادی حکومت عمران خان کی بچھائی اقتصادی بارودی سرنگیں ہٹانے میں ناکام ہوگئی ہے۔ قومی بجٹ عوام پر بڑا عذاب بن کر مسلط کیا گیا ہے۔ مہنگائی، بیروزگاری کا سیلاب آئے گا، پیداواری لاگت بڑھنے، ٹیکسوں میں بے تحاشا اضافہ قومی معیشت کا پہیہ جام کردے گا۔ قومی بجٹ میں سودی معیشت کے خاتمے اور اسلامی معاشی نظام کے نفاذ کا کوئی روڈ میپ نہیں ہے۔ قومی بجٹ اسلام اور عوام دشمن ہے۔ اتحادی حکومت اپنے ابتدائی 100 دن میں عمران خان سرکار کی طرح ناکام ہے اور مستقبل میں بھی کسی بڑی اصلاح اور انقلابی اقدامات کی توقع نہیں ہے۔ ابھی آئی ایم ایف کی بدترین شرائط کے تسلط کا بوجھ آنا باقی ہے۔ جماعت اسلامی پورے ملک میں سودی اور عوام دشمن بجٹ کے خلاف احتجاجی تحریک چلائے گی۔لیاقت بلوچ نے سیاسی کمیٹی کے ارکان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ریاستی نظام پر سیاسی جمہوری قیادت اور اسٹیبلشمنٹ کی گرفت کمزور ہوگئی ہے، عوام مایوس ہیں اور قومی شیرازہ بکھرا ہوا ہے۔ سیاست میں شدت، انتہا پسندی، انتقامی بدکلامی اور بدتہذیبی بڑا المیہ بن گئی ہے۔ جماعت اسلامی کو آئینی، جمہوری، اسلامی نظریاتی جدوجہد تیز کرنا ہوگی۔ ہم محب دین، محب وطن، باصلاحیت اور دردمند اہل لوگوں کو متحد و متحرک کرکے بحرانوں کا خاتمہ کریں گے۔جامع مسجد مبارک اور کارکنان کی شب تربیت سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اللہ کے احکامات سے انحراف کی وجہ سے امت انتشار کا شکار ہے اور اخلاقی، فکری اور بے راہ روی پر مبنی فساد پھیل گیا ہے۔ بھارت میں انتہا پسند دہشت گرد حکمران جماعت نے پیغمبر اسلام کی توہین و تضحیک سے ثابت کیا ہے کہ بھارت حکمران جماعت کی راج دھانی اور خطے کے امن کے لیے خطرناک ہوتا جارہا ہے۔