مزید خبریں

Jamaat e islami

ایشیا کپ کی منتقلی سے 50لاکھ ڈالر کا نقصان ہوگا ، سری لنکن بورڈ

کولمبو(جسارت نیوز)سری لنکن کرکٹ بورڈ کے سی ای او ایشلے ڈی سلوا نے کہا ہے کہ ایشیا کپ منتقل ہونے کی صورت میں انہیں 50لاکھ ڈالر سے زائد کا نقصان ہو سکتا ہے، ایس ایل سی حکام نے اپنے دورہ بھارت کے دوران اے سی سی سے درخواست کی ہے کہ وہ انہیں اس ایونٹ کی میزبانی کرنے دیں۔تفصیلات کے مطابق سری لنکا میں حالیہ سیاسی اور معاشی بحران کے باعث ایشین کرکٹ کونسل ملک میں ایشیا کپ کے انعقاد پر کشمکش میں مبتلا تھی۔بورڈ کے چیئرمین نے کہا کہ بھارت اور پاکستان جیسی ٹیموں کی میزبانی سے بڑی آمدنی ہوتی ہے ،یہی وجہ ہے کہ ہم اب بھی ان ممالک کو سری لنکا میں کھیلنے پر آمادہ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، ہمارے لیے آمدنی اہم ہے،اس وقت ہمارے ملک کے لیے کوئی بھی آنے والا ڈالر اہم ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم سب ایشیا کپ کی میزبانی کے لیے تیار ہیں ۔سری لنکن کرکٹ بورڈ کے سیکرٹری نے کہا کہ ابھی تک کوئی حتمی فیصلہ نہیں ہوا ہے سب کچھ اس بات پر منحصر ہے کہ ہم آسٹریلوی سیریز کا انعقاد کیسے کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جے شاہ اور اے سی سی کے دیگر عہدیداروں نے ہمیں یقین دلایا ہے کہ اگر سب کچھ ٹھیک رہا تو ایشیا کپ سری لنکا میں ہی ہوگا۔