مزید خبریں

عقیدہ ختم نبوت ریڈ لائن، سپریم کورٹ کا فیصلہ آئین کیخلاف ہے، مفتی جان نعیمی

بدین (نمائندہ جسارت) مرکزی جماعت اہلسنّت سندھ کے امیر مفتی اعظم سندھ مفتی محمد جان نعیمی نے کہا ہے کہ عقیدہ ختم نبوت ریڈ لائن، سپریم کورٹ کا فیصلہ آئین کے خلاف ہے، ختم نبوت کے خلاف غداری ملک سے غداری ہو گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بھٹی مسجد کے قریب بڑے عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ختم نبوت کے عقیدے میں کسی قسم کا شکوک و شبہات رکھنے والا کسی اعلیٰ عہدے پر فائز اور وہ پاکستان اور اُمت مسلمہ کا وفادار نہیں ہو سکتا۔ چیف جسٹس کا قادیانیوں کو رعایت دینا مسلمانوں کے لیے خطرہ ہے، سپریم کورٹ کے جج شاید بھول گئے کہ وہ اسلامی جمہوریہ پاکستان کے چیف جسٹس ہیں نہ کہ عالمی عدالت انصاف کے۔ انہوں نے کہا کہ پاور کوریڈور کے لوگ قادیانیت کے حق میں بول کر عالمی طاقتوں کی توجہ مبذول کروانا چاہتے ہیں، مسلمان ایسی سازشوں سے ہوشیار رہیں۔ سندھ کے مشہور مبلغ مولانا محمد عالم جٹ نعیمی نے کہا کہ کافر جانتا ہے کہ مسلمان کی سب سے بڑی دولت ایمان اور عشق مصطفی ہے جسے وہ کسی بھی قیمت پر ختم کرنا چاہتے ہیں، عقیدہ ختم نبوت کا تحفظ ہر مسلمان کی ذمہ داری ہے۔ اس موقع پر مفتی احمد صادق نعیمی، علامہ خادم حسین نعیمی، علامہ حبیب اللہ نعیمی،حافظ غلام مصطفی سومرو، حاجی نعمان بھٹی، حافظ عبدالغنی طاہری، مولانا عبدالحنان نعیمی اور قاری حسین بلالی سمیت ہزاروں افراد موجود تھے۔