مزید خبریں

Jamaat e islami

جیو گرافک انفارمیشن سسٹم کے بہتر نتائج آرہے ہیں،فاروق شیخانی

حیدرآباد(اسٹاف رپورٹر)حیدرآباد چیمبر آف اسمال ٹریڈرز اینڈ اسمال انڈسٹری کے صدر محمد فاروق شیخانی نے سندھ اسمال انڈسٹری میں چھوٹے صنعتی اقدامات کے لیے جیوگرافک انفارمیشن سسٹم کے نفاذ پر صوبائی وزیر برائے کامرس اینڈ انڈسٹری اور ریونیو محمد یونس ڈھاگا کو خط لکھ دیا۔ اُنہوں نے کہا کہ ایک جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے جیوگرافک انفارمیشن سسٹم میں مہارت حاصل کرنے کی ضرورت ہے۔ اِس سسٹم سے ڈیٹا بیس انضمام، مجموعی پیداواری صلاحیت اور اعلیٰ نظم و نسق کے ڈیش بورڈ بنانے میں کامیابی حاصل ہوگی۔ یہ سسٹم پہلے ہی بورڈ آف ریونیو، محکمہ تعلیم، پی ڈی ایم اے وغیرہ میں لگایا جاچکا ہے جس کے بہترین نتائج حاصل ہو رہے ہیں۔ اُنہوں نے کہا کہ یہ سسٹم چھوٹی صنعتوں کے بنیادی ڈھانچہ فراہم کرنے، اُنہیں فروغ دینے، صوبے کے نوجوانوں کو مختلف دستکاری و تجارت میں تربیت فراہم کرنے، دیہی علاقوں میں چھوٹی صنعتوں کے قیام کی حوصلہ افزائی کرنے، کاریگروں کو مارکیٹ کی طلب کے مطابق ڈیزائننگ اور موافقت میں مدد فراہم کرنا، سندھ اسمال انڈسٹری کارپوریشن کی دستکاری کی دکانوں، مقامی و غیر ملکی بازاروں میں میلوں اور نمائشوں میں شرکت کے ذریعے کاریگروں کی سہولیات فراہم کرنے میں بہترین معاونت فراہم کرے گا۔ اُنہوں نے کہا کہ اِس سسٹم سے آپریشنز کے جغرافیائی پہلوؤں کے بارے میں بصیرت حاصل ہوگی، گہرائی سے تجزیہ کر نے میں مدد ملے گی، وسائل کی تقسیم اور ممکنہ خطرات کی نشاندھی میں مدد ملے گی۔ اِس سسٹم سے مجموعی منصوبہ بندی کو بہتر بنانے اور صوبہ سندھ میں نئی چھوٹی صنعتوں کے مقامات ڈھونڈنے میں مدد ملے گی۔ اُنہوں نے کہا کہ جیوگرافیکل انفارمیشن سسٹم صنعتی اَثاثوں کے موثر انتظام کے لیے ٹائم ٹریکنگ اور مانیٹرنگ فراہم کر کے کم وقت میں بہتر منصوبہ بندی کرنے کی سہولت فراہم کرتا ہے۔ یہ سسٹم چھوٹی صنعتوں سے جامع ماحولیاتی تبدیلی کے اَثرات بھی بہتر انداز میں مرتب کرتا ہے اور سپلائی چین کو جدید تقاضوں کے ذریعے بہتر بنانے میں مدد دیتا ہے جس سے انڈسٹری میں مزید سرمایہ کار شامل ہوتے ہیں۔