مزید خبریں

Jamaat e islami

خرم شیر کی ایم ڈی سوئی گیس سے ملاقات، مختلف مسائل پر گفتگو

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کے پارلیمانی لیڈر سندھ اسمبلی خرم شیرزمان وفد کے ہمراہ سوئی گیس کے ہیڈ آفس پہنچے، خرم شیرزمان نے ایم ڈی سوئی گیس سے ملاقات کی، وفد میں اراکین اسمبلی ارسلان تاج، شاہنواز جدون، رابستان خان اورشہزاد قریشی سمیت دیگر موجود تھے،ایم ڈی سوئی گیس سے ملاقات میں کراچی میں گیس کی لوڈشیڈنگ ،پریشر کی کمی سمیت دیگر تکنیکی مسائل پر گفتگو ہوئی،اس موقع پر خرم شیرزمان نے سوئی گیس دفتر کے باہر میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ شہر میں گیس کی قلت اور پریشر کے مسائل کے بڑھتے جارہے ہیں،گیس کے نرخوں میں ظالمانہ اضافہ، گھروں،سی این جی اسٹیشنز پر لوڈشیڈنگ اور صنعتی ادارے بھی پریشان ہیں، سردیوں کی آمد کے ساتھ ہی گیس پریشر میں کمی و بندش شروع ہوجاتی ہے، گیس کے نرخ میں اضافے کے باوجود عوام کو گیس نہیں مل رہی ہے، گیس کی ملکی پیداوار میں سندھ کا 74فیصد حصہ ہے،لیکن سندھ کو صرف 38فیصد گیس دی جاتی ہے، سی این جی اسٹیشنز اور صنعتیں بند ہونے سے بیروزگاری میں اضافہ ہورہا ہے، صوبائی محتسب کے پاس سوئی گیس کے حوالے سے شکایتوں کے انبار لگے ہیں، شہر میں کوئی شہری ایسا نہیں جسے گیس میسر ہو۔وہ سیاسی جماعتیں جو اپنے آپ کو گیس کا چیمپئن قرار دیتی تھیں،امپورٹڈ حکومت کے بعد گیس کی کمی کا سامنا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں سب سے زیادہ خراب کارکردگی مراد علی شاہ کی رہی ہے۔ہمارے دور میں 600 میگاواٹ بجلی وفاق سے یہاں بجلی کے سسٹم میں ایڈ کی تھی۔