مزید خبریں

Jamaat e islami

قرضہ دینے کے قابل تھے ،قرض لینے میں شرم آنی چاہیے،خورشید شاہ

سکھر( نمائندہ جسارت) وفاقی وزیر آبی وسائل سید خورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ حکومت13 اگست 2023ء کو اپنی مدت پوری کریں گی اور اس کے 60 دن بعد نئے انتخابات ہونگے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے روہڑی کے قریب اروڑ کے تاریخی شہر میں آرٹ اینڈ ڈیزائن یونیورسٹی کی افتتاحی تقریب میں شرکت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اگر عمران خان مجرم ہے تو اسے گرفتار ہونا چاہیے تاہم عمران خان نے مجھے ایک بار کہا تھا کہ وہ ایک دن بھی جیل میں رہے تو مرجائیں گے ،عمران خان کہتا ہے کہ یوٹرن لینا سیاست کا حصہ ہے، پیپلزپارٹی کسی کو غداز نہیں کہتی اور سیاستدانوں کو بھی ایک دوسرے کو اس طرح کے القابات نہیں دینے چاہئیں ۔ ان کا کہنا تھا کہ پاکستان قرضہ دینے کے قابل ملک تھا مگر اب ہمیں قرضہ لیتے ہوئے شرم آنی چاہیے۔ ۔ وفاقی وزیر سکھر بورڈ انتظامیہ پر برس پڑے اور کہا کہ طلبہ سے امتحان تو سکھر بورڈ والوں کے باپ کو بھی لینا پڑے گا نہیں لیں گے تو پھر ان کو خورشید شاہ کا سامنا کرنا پڑے گا۔ خورشید شاہ کا کہنا تھا کہ سکھر بورڈ کو فنڈز کی کمی نہیں ہے ان کا کہنا تھا کہ ملک میں بہتر اور معیاری تعلیم کی فراہمی ان کا خواب ہے جس کا آغاز انہوں نے سکھر سے کردیا ہے سکھر میں اس وقت اچھی یونیورسٹیز اور اچھے اسکول بھی ہیں مگر وہ چاہتے ہیں کہ یہاں پرائیویٹ سیکٹر بھی آئے اس کے ادارے بھی ہوں تاکہ پرائیویٹ سیکٹر اور سرکاری اسکولوں کے درمیان مقابلے کا رجحان بڑھے، حکومت پرائیویٹ سیکٹر کو اس حوالے سے سہولیات فراہم کرے ان کا کہنا تھا کہ میری خواہش ہے کہ علاقے کے سرکاری اسکولوں کو اس سطح پر لے جاؤں کہ لوگ اپنے بچوں کو وہاں بھیجتے ہوئے فخر محسوس کریں ۔ . واضح رہے کہ چند روز قبل سندھ بھر کے بورڈ ملازمین نے کورونا الاؤنس نہ ملنے پر احتجاجاً طلبہ سے امتحان نہ لینے کی دھمکی دی تھی جس سے اس معاملے سے متعلق سوال کرنے پر خورشید شاہ سکھر بورڈ انتظامیہ پر برس پڑے ۔