مزید خبریں

Jamaat e islami

دولت مشترکہ کھیل ، پاکستان کی 18ویں پوزیشن ایتھلیٹس کی وطن واپسی

کراچی(اسٹاف رپورٹر)کامن ویلتھ گیمز 2022 میں پاکستان کی پوزیشن 18ویں رہی جب کہ آسٹریلیا کی برتری کے ساتھ کھیلوں کے مقابلے اپنے اختتام کو پہنچ گئے۔ کامن ویلتھ گیمز میں سب سے زیادہ تمغے آسٹریلیا نے حاصل کیے، آسٹریلیا سونے کے 67 ، چاندی کے 57 اور کانسی کے 54 میڈلز کے ساتھ نمبر ون رہا اور کینگروز نے مجموعی طور پر 178 میڈلز اپنے نام کیے۔ برمنگھم میں ہونے والے گیمز میں انگلینڈ نے 57 سونے، 66 چاندی اور 53 کانسی کے میڈل جیت کر دوسری پوزیشن حاصل کی جبکہ کینیڈا نے سونے کے 26، چاندی کے 32 اور کانسی کے 34 میڈلز جیتے اور تیسرے نمبر پر رہا۔ بھارت نے 22 سونے، 16 چاندی اور 23 کانسی کے تمغے جیت کر چوتھی پوزیشن حاصل کی جبکہ پاکستان نے سونے کے دو چاندی اور کانسی کے تین تین تمغے جیت کر 18ویں پوزیشن حاصل کی۔دوسری طرف کامن ویلتھ گیمز میں شاندار کارکردگی دکھانے والے قومی ہیروز کی وطن واپسی شروع ہوگئی ہے۔ اسلام آباد ایئرپورٹ پر ڈائریکٹر جنرل، پاکستان اسپورٹس بورڈ کرنل ریٹائرڈ محمد آصف زمان نے گزشتہ روز کھلاڑیوں کا استقبال کیا۔ اس موقع پاکستان سپورٹس بورڈ کے اسٹنٹ ڈائریکٹر (ہوسٹل) غلام تقی خان بوسن اور ٹرانسپورٹ آفسیر فدا محمد بھی موجود تھے۔ کھلاڑیوں میں سلور میڈلسٹس زمان انور، محمد شریف طاہر اور برانز میڈلسٹ اسد علی شامل تھے۔ کامن ویلتھ میڈلسٹ کو پھولوں کے ہار پہنائے گئے ۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئیکرنل ریٹائرڈ محمد آصف زمان نے کہا کہ ہم اپنے قومی ہیروز کو ایئرپورٹ پر خوش آمدید کہنے آئے ہیں، ارشد ندیم ،نوح دستگیر بٹ اور دیگر میڈلسٹ کا بھی وطن واپسی پر استقبال کیا جائے گا اور ان کھلاڑیوں کے اعزاز میں تقریب منعقد کی جائے گی جس میں کھلاڑیوں کو انعامات سے نوازیا جائے گا۔ کرنل آصف زمان نے کہا کہ گولڈ میڈلمیڈلسٹ کو پچاس لاکھ، سلور کو بیس اور برانز میڈلسٹ کو دس لاکھ انعام دیں گے۔