مزید خبریں

Jamaat e islami

پی ٹی آئی کو فوج سے لڑوانے کی سازش ہورہی ہے،عمران خان

اسلام آباد( نمائندہ جسارت)سابق وزیراعظم اور تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کو فوج سے لڑوانے کی سازش ہورہی، شہباز گل نے جو کہا اگر قانون کے خلاف تھا تو اس پر چارج لگائیں، شہباز گل کو عدالت میں صفائی پیش کرنے کا موقع ملے۔اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھاکہ بیرونی سازش کے ذریعے ہماری حکومت کو ہٹایا گیا، ہماری حکومت گرائی گئی تو خوشی منائی گئی، بھارت کا میڈیا دیکھیں تو لگتا ہے ان کا ہی پرائم منسٹر بن گیا، میری حکومت گرانے پر اسرائیل اور بھارت میں خوشی منائی گئی۔انہوں نے کہا کہ رجیم چینج کی سازش اب آگے چل رہی ہے، خوفناک سازش کا پلان بنایا گیا ہے اورپلان بنایا گیا کہ ملک کی سب سے بڑی سیاسی پارٹی اور فوج کو لڑایا جائے، انہیں سب سے بڑی تکلیف تھی کہ فوج اور حکومت ایک ہی پیج پر چل رہی ہے، بھارت میں کہا جاتا تھا کہ عمران خان اور فوج ایک ہی پیج پر ہیں۔پی ٹی آئی چیئرمین کا کہنا تھاکہ ہمارے سوشل میڈیا کے جوانوں نے ڈس انفولیب کو بے نقاب کیا، ڈس انفو لیب پاکستان کے خلاف سازش کررہی تھی، سازش میں وہ لوگ بھی تھے جو امپورٹڈ حکومت میں ہیں، یہ ڈس انفولیب عمران خان اور فوج کو ٹارگٹ کررہی تھی، آج بتایاجارہاہیکہ ہم غدار ہیں یہ محب وطن ہیں، یہ سازش ہے کہ فوج کے سامنے بڑی جماعت کو کھڑا کردیں۔ عمران خان نے کہاکہ بڑی سیاسی جماعت کوفوج کیخلاف کھڑا کرنا ملک کے لیے سب سے زیادہ نقصان دہ ہے، سازش وہ لوگ کررہے ہیں جوخود بیرونی سازش کاحصہ ہیں، پوری کمپین کی ہوئی ہے کہ ہماری اور فوج کی لڑائی ہوجائے، پارٹی توڑنے کاپورا پلان بنایا ہوا ہے۔ان کا کہنا تھاکہ فارن فنڈنگ کیس میں کچھ بھی نہیں ، کرپٹ پارٹیاں کبھی فنڈ ریزنگ نہیں کرسکتیں، ہم نے 40 ہزارڈونر کے نام دیے ہوئے ہیں، ہماری جماعت نے الیکشن کمیشن کو ایک ایک چیز دی ہوئی ہے، لوگوں نے ہمیں پیسے دیے اور ہمارے پاس آڈٹ بک موجود ہیں، باقی جماعتوں کے پاس کدھر سے پیساآیاان کے پاس بتانے کو کچھ نہیں۔سابق وزیراعظم نے الزام عائد کیا کہ الیکشن کمیشن کی رپورٹ جھوٹی بنائی گئی ہے، چیلنج کرتاہوں کہ ایک ہی پارٹی ہے جس نے سیاسی فنڈ ریزنگ کی ، یہ الیکشن کمیشن سے مل کر تکنیکی طور پر ناک آؤٹ کرنا چاہتے ہیں، ان کے پاس کوئی آڈٹ رپورٹ نہیں ، ڈونر نہیں، کدھرسے پیسہ آیا، عدالتی حکم کے باوجود الیکشن کمیشن نے صرف پی ٹی آئی کوکٹہرے میں کھڑا کیا، کے الیکٹرک ان 2 جماعتوں کے دورمیں عارف نقوی کو دی گئی، سب کوتحفے ملتے ہیں، سب کی تحقیقات کریں ، آصف زرداری نے 3اور نوازشریف نے ایک گاڑی توشہ خانہ سے لی۔پی ٹی آئی چیئرمین نے مزید کہاکہ ان کی کوشش ہے کہ عمران خان کی کردارکشی کی جائے اور کسی کیس میں پھنسایا جائے، اتنا خوف پھیلا دو کہ کوئی میرا مؤقف نہ لے، توشہ خانہ سے تحفے قانونی تقاضے پورے کرکے لیے۔ان کا یہ بھی کہنا تھاکہ نہیں پتا کہ ڈرون حملے کے لیے پاکستان کی حدود استعمال ہوئی کہ نہیں، خیبرپختونخوا میں ہمارے وزیروں کو کالعدم ٹی ٹی پی سے دھمکی مل رہی ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مجھے ملک کی فکر ہے جسے ملک کی فکر ہوگی تو وہ چاہے گا فوج کا ادارہ مضبوط ہو۔اس دوران سابق وزیراعظم نے نواز شریف، آصف زرداری، مولانا فضل الرحمن اور مریم نواز کے پرانے وڈیو کلپ بھی چلوائے۔