مزید خبریں

Jamaat e islami

غیر ملکی کمپنیوں سے پیسے لینا 2012ء میں غیر قانونی نہیں تھا ، عمران خان

اسلام آباد(نمائندہ جسارت)تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہغیرملکی کمپنیوں سے پیسے لینا 2012ء میں غیرقانونی نہیں تھا، جب ہم نے کمپنیوں سے پیسے لیے اس وقت قانوناً جائز تھے،پیسے کے بغیر سیاسی جماعت کیسے چل سکتی ہے؟ 2012 ء میں بیرونی کمپنی سے پیسے آسکتے تھے اور2017ء بیرونی کمپنی سے پیسے لینے پر پابندی لگی۔ الیکشن کمیشن کے خلاف احتجاج کے موقع پر عوام سے وڈیو لنک کے ذریعے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مڈل کلاس اور تنخواہ دار کے لیے سیاست مہنگی ہوگئی، ن لیگ اور پیپلز پارٹی پیسے کے بل پر سیاست میں ہیں۔عمران خان نے کہا کہ بیرون ملک پاکستانیوں میں شعور ہے ان کو معلوم ہے جمہوری نظام کیا ہوتا ہے، ان دونوں پارٹیوں نے فنڈریزنگ کیوں نہیں کی؟ کیونکہ ن لیگ اور پیپلز پارٹی کو کوئی پیسہ دے گا ہی نہیںاور افسوس کہ الیکشن کمیشن نے دونوں پارٹیوں کی فنڈنگ کے کیسز نہیں سننے۔انہوں نے کہا کہ ہمارے پاس 40 ہزار ڈونرز ہیں، ووٹن کارٹن کلب کا مالک عارف نقوی تھا، 2012 میں ہم پیسے لیے اور عارف نقوی پر فراڈ کا چارج 2018 میں لگتا ہے۔چیئرمین پی ٹی آئی کے مطابق عارف نقوی نے میچ فیسٹول کیا اور پھر کھانا کیا تھا جس میں پیسے اکٹھے کیے، الیکشن کمیشن کہہ رہا ہے کہ یہ فارن فنڈنگ کیس ہے، یہ بتائیں جو پاکستانی 31 ارب ڈالر بھیجتے ہیں وہ کیا ہے۔سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ اس ملک اب بھی وہ قوتیں بیٹھیں ہیں جو عوام کنٹرول کرنا چاہتی ہیں، حکومت نے الیکشن کمیشن کے ساتھ مل کو الیکٹرونک مشین کوسبوتاژکیا، پیسے پر لوگ بک رہے ہیں ، الیکشن کمیشن نے کوئی ایکشن نہیں لیا، حکمرانوں نے ہماری جماعت کو توڑنے کے لییپیسہ لگایا ، اسلام آباد کو کنٹینرز لگا کر بند کیا گیا، کیا کوئی حملہ ہونے لگا ہے ، یہ ہمیشہ اداروں کو استعمال کرتے ہیں، بھٹو کا جوڈیشل قتل کیا گیا تو یہی لوگ تھے جو آج پیپلزپارٹی کے ساتھ بیٹھے ہیں، ضمنی الیکشن میں ان لوگوں نے دھاندلی کرائی ، عوام پر 25مئی کو کیاگیا ظلم کبھی نہیں بھولوں گا ، ای وی ایم سے دھاندلی کے 130 طریقے ختم کیے جاسکتے ہیں، دونوں جماعتوں کے ساتھ الیکشن کمیشن ملا ہوا ہے۔ عمران خان کا مزید کہناتھا کہ الیکشن کمیشن کو شرم نہیں آئی جب شہباز شریف اور ان کے بیٹے حمزہ شہباز پر 24ارب روپے کے کیسز چل رہے ہیں اور انہیں الیکشن لڑنے کی اجازت دی۔