مزید خبریں

سندھیوں کو اقلیت میں تبدیل کیا جا رہا ہے،سندھ یونائیٹڈ پارٹی

میرپورخاص(نمائندہ جسارت) سندھ یونائیٹڈ پارٹی کی جانب کراچی کے غازی گوٹھ پر پولیس کی چڑھائی اور سندھ سے افغانیوں کو نکالنے کیلیے پریس کلب کے سامنے احتجاج کیا گیا، مظاہرین نے کراچی پولیس، حکومت سندھ اور افغانیوں کے خلاف شدید نعرے بازی کی ۔ تفصیلات کے مطابق سندھ یونائیٹڈ پارٹی مرکز کی ہدایت پر میرپورخاص پریس کلب کے سامنے منظور میمن، لالا اظہر، اکرم تھیبو، محمد خان مری اور دیگر کی قیادت میں پریس کلب کے سامنے احتجاج کیا گیا۔ اس موقع پر مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے کہا کہ کراچی پولیس کی جانب سے کراچی کے قدیم غازی گوٹھ پر چڑھائی اور گوٹھ کو مسمار کر کے لوگوں کو بے دخل کیا جا رہا ہے اور سندھیوں کو اقلیت میں تبدیل کیا جا رہا ہے اور یہ سب سندھ حکومت کی ایما پر کیا جارہا ہے جس کی ہم شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت سندھ نے افغانیوں کو کھلی چھوٹ دے رکھی ہے ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ سندھ سے افغانیوں سمیت تمام غیر ملکیوں کو فوری بے دخل کیا جائے۔ اس موقع پر مظاہرین نے حکومت سندھ، کراچی پولیس اور افغانیوں کے خلاف شدید نعرے بازی بھی کی۔