مزید خبریں

فلسطینی مزاحمت کاروں کی فائرنگ سے اسرائیلی کمانڈر شدید زخمی

مقبوضہ بیت المقدس (انٹرنیشنل ڈیسک) فلسطین کے شمالی مغربی کنارے میں فلسطینی مزاحمت کاروں کی فائرنگ سے اسرائیلی فوجی کمانڈر شدید زخمی ہوگیا۔ خبررساں اداروں کے مطابق اسرائیلی جنرل روعی زویگ اور 2آباد کاروں کو گولیاں لگنے پر اسپتال منتقل کیا گیا۔ دوسری جانب اسرائیلی فوج نے مقبوضہ بیت المقدس میں 4فلسطینی مزدوروں کو گرفتار کر لیا۔ گرفتار کیے گئے مزدورکام پر جا رہے تھے۔ زیر حراست افراد میں 3بھائی شامل ہیں،جن کی شناخت منصور صلاح ، محمد صلاح اور محمود صلاح کے نامی سے ہوئی ہے۔ چوتھے مزدور کی شناخت حضر نامی گاوں کے رپائشی عامر زیہ کے طور پر ہوئی ہے۔ ادھر فلسطینی رہنماؤں نے یہودی آباد کاروں دھاووں اور منصوبوں کو پسپا کرنے کے لیے مسجد اقصیٰ میں متحرک ہونے اور مقدس مقام میں حج کے ایام میں اعتکاف کی اپیل کی ہے۔ فلسطینی پارلیمانی بلاک’القدس موعدنا‘ کی امیدوار اسمبلی فادیہ برغوتی نے فلسطینی مسلمانوں پر زور دیا کہ وہ قبلہ اول میں جمعہ کے اجتماع میں زیادی سے زیادہ حاضری کو یقینی بنائیں۔ برغوثی نے ذوالحج کے ابتدائی 10ایام میں مسجد اقصیٰ کے صحن میں اعتکاف کی ضرورت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ حج کے بابرکت ایام میں ارض فلسطین میں متحرک ہونے کا وقت ہے۔ فلسطین کے باشندوں نے ثابت کیا ہے کہ وہ اعتماد کے لائق اور الاقصیٰ کے محافظ ہیں۔ ان کے جوانوں نے اعلان کیا ہے کہ ان کا اولین مقصد قبلہ اول کا دفاع ہے۔اگر ہماری صفوں میں اتحاد ہوتو صہیونی دشمن ہمارا کچھ بگاڑ نہیں سکتا۔