مزید خبریں

یوروزون میں مہنگائی کی شرح 25سال کی بلند ترین سطح پر

برسلز (انٹرنیشنل ڈیسک) یورو زون کے 19 ممالک میں مہنگائی کی شرح 25 سال کی بلند ترین سطح پر پہنچ گئی ہے۔یورپی یونین کے محکمہ شماریات کی جانب سے یکم جولائی کو جاری رپورٹ کے مطابق جون 2022 ء میں یورو زون کے 19 ممالک میں مہنگائی کی شرح 8.6 فیصد تک پہنچ گئی۔اس سے پہلے خیال کیا جارہا تھا کہ مہنگائی کی شرح 8.4 فیصد رہے گی۔اب اس خطے میں مہنگائی کی شرح 1997 ء کے بعد سب سے زیادہ ہے کہ جب یورو کرنسی کاآغاز ہوا تھا۔یورو زون میں مہنگائی کی شرح میں گزشتہ ایک سال کے دوران مسلسل اضافہ ہوا ہے۔ پہلے کورونا وائرس کی وبا کے دوران لاک ڈاؤن اور پھر یوکرین پر روس کے حملے سے ایندھن کی قیمتوں میں اضافہ ہوگیا۔مہنگائی کی روک تھام کے لیے یورپی مرکزی بینک کی جانب سے شرح سود میں بھی جولائی کے دوران اضافہ کیا جائے گا۔ خطے میں ایندھن کی قیمتوں میں جون کے دوران 41.9 فیصد اضافہ ہوا جبکہ خوراک کی قیمتوں میں 11.1 فیصد اضافہ ہوا۔دوسری جانب متحدہ عرب امارات میں 12 فیصد اضافے کے بعد پٹرول کی فی لیٹر قیمت 4.63 درہم ہوگئی جو پاکستانی 257 روپے بنتی ہے۔ عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق متحدہ عرب امارات میں ایک بار پھر پٹرولیم مصنوعات میں اضافہ کردیا گیا۔ اس بار پٹرول کی قیمتوں میں 12 فیصد اور ڈیزل کی قیمت میں 15 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ مارات میں 4 ماہ کے دوران پٹرول کی قیمتوں میں 100 فیصد اضافہ ہوا ہے۔