مزید خبریں

ٹھٹھہ ،مختلف علاقوں کے مکین 10 روز سے پانی کی بوند بوند کو ترس گئے

ٹھٹھہ (نمائندہ جسارت)مکلی پوسٹ آفس ایریا اور دیگر قریبی علاقوں میں دس دنوں سے پانی کی فراہمی معطل پیپلز پارٹی کے ہمدرد پانی کی بوند بوند کو ترس گئے محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ کی کرپشن نے عوام کو پیاسا مار دیا پانی فراہم کرنے والی پائپ لائن ایک بار پھر ٹوٹ گئی عوام نے محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ کے آفس کا گھیراؤ کرنے کا اعلان کردیا ۔محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ کی نااہلی اور بے پناھ کرپشن کی وجہ سے مکلی پوسٹ آفس ایریا اور اس کے قریبی علاقوں کے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس گئے پانی سپلائی کرنے والی پائپ لائن ناقص مٹیریل کے استعمال کی وجہ سے ایک بار پھر ٹوٹ گئی جس کی وجہ سے مکلی پوسٹ آفس ایریا اور اس کے قریبی علاقوں میں دسویں روز بھی پانی کی سپلائی بحال نہ ہوسکی دو روز قبل مکلی پوسٹ آفس ایریا اور قریبی علاقوں کی پانی کی وارا بندی تھی مگر کچھ اثر ورسوخ شخصیات نے اس ایریا کا پانی وال مینوں سے کھلوانے نہیں دیا اور اپنے علاقے کا پانی کھلوالیا تھا پائپ لائن دو روز قبل ہی 8 دنوں بعد مرمت کی گئی تھی مگر آج پھر مکلی پوسٹ آفس ایریا جہاں اے سیز اور اے ڈی سی کے بنگلے بھی ہیں کو پانی کی فراہمی بحال نہ ہوسکی کیونکہ ناقص مٹیریل سے مرمت کی جانے والی پائپ لائن دوبارہ ٹوٹ گئی ہے جس کی وجہ سے مزید تین سے چار روز تک پانی فراہم نہیں ہو سکے گا یہ ایریا پیپلز پارٹی کے ورکرز اور ہمدردوں کا ایریا ہے اسی ایریا سے پچھلے بلدیاتی انتخابات میں پیپلز پارٹی ضلع ٹھٹھہ کے انفارمیشن سیکرٹری سید محمود عالم شاہ کے بھائی سید محبوب عالم شاہ بھاری اکثریت سے جیتے تھے مگر اس علاقے کو محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ نے بالکل نظر انداز کیا ہوا ہے اور اس ایریا کے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس گئے ہیں یہاں کے رہائشیوں نے آصف زرداری، بلاول زرداری ،صادق علی میمن، سید ریاض حسین شاہ شیرازی اورڈپٹی کمشنر ٹھٹھہ سے مطالبہ کیا ہے کہ محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ کی انتظامیہ کے خلاف سخت سے سخت کارروائی کی جائے ورنہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ کے آفس کا گھیراؤ کیا جائے گا۔ واضح رہے کہ چند سالوں میں محکمہ پبلک ہیلتھ ٹھٹھہ میں کئی کرپشن کی اطلاعات عام ہیں اور کئی سابقہ اور حالیہ افسران کرپشن کے کیسز میں مختلف اداروں اور عدالتوں کے چکر کاٹ رہے ہیں۔