مزید خبریں

اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے 3فلسطینی شہید ، 10زخمی

مقبوضہ بیت المقدس (انٹرنیشنل ڈیسک) مقبوضہ مغربی کنارے کے شہر جنین میں اسرائیلی فوج نے صبح سویرے حملہ کردیا،جس کے نتیجے میں 3افراد شہید اور 10 زخمی ہو گئے۔ مقامی ذرائع کے مطابق شہید ہونے والوں میں 23 سالہ یوسف ناصر صلاح، 24 سالہ لیث صلاح ابو سرور اور عز الدین القسام بریگیڈ سے وابستہ 24 سالہ برا کمال لحلوح شامل ہیں۔ لحلوح شہادت سے 2ماہ قبل ہی اسرائیلی جیل سے رہا ہوئے تھے۔ چھاپا مارکارروائی کے دوران اسرائیلی فوجی کے دستوں نے جنین کے مشرقی علاقے میں سفید رنگ کی مزدا گاڑی پر فائرنگ کی ۔ اسرائیلی فوج کی 30 گاڑیوں پر سوار صہیونی فوجیوں نے کارروائی سے قبل شہر کے مشرقی علاقے میں ماہر نشانے بازوں کو تعینات کر دیا،جنہوں نے گھات لگا کر فائرنگ کی۔ اس دوران گاڑی میں سوار 3نوجوان شہید ہو گئے جب کہ چوتھا شدید زخمی ہوا۔ اسرائیلی فوجی اس کارروائی کے بعد جائے واردات سے بھاگ نکلے۔ ادھر اس واقعے کے بعد فلسطینیوں میں سخت غصے کی لہر دوڑ گئی اور سیکڑوں افراد گھروں سے باہر نکل آئے۔ اس دوران صہیونی فوج سے جھڑوں میں 10افراد زخمی ہوئے،جب کہ کشیدگی بڑھنے کے باعث فوج کی مزید کمک طلب کرلی گئی۔ جھڑپوں کے دوران نوجوانوں نے اسرائیلی فوجیوں پر پتھراؤ کیا،جس کے جواب میں فوجیوں نے براہ راست فائرنگ کردی۔ اسرائیلی فوج نے کالونی کے رہایشی موسیٰ عجاوی کے گھر چھاپامارا اور تلاشی کے دوران خوب لوٹ مار بھی کی۔ حماس کی جانب سے صہیونی فوج کی درندگی کی مذمت کرتے ہوئے شہدا کے لواحقین سے ہمدردی کا اظہار کیا گیا ہے۔